Momina Iqbal 176

شازل شوکت اور مومنہ اقبال پہلے دل ٹوٹنے کے بارے میں بات کرتے ہیں

اداکارہ شازل شوکت اور مومنہ اقبال کو ’گڈ مارننگ پاکستان‘ پر میزبان ندا یاسر کے تازہ ترین مہمانوں کے طور پر بٹھایا گیا۔

’سمجھوتا‘ کی اسٹار کاسٹ نے میزبان کے سوالوں کے کچھ تابڑ توڑ جوابات دیے اور یہ انکشاف بھی کیا کہ وہ زندگی کے پہلے دل کے ٹوٹنے سے کب گزرے۔

ایک سوال کے جواب میں اقبال نے انکشاف کیا کہ دل ٹوٹنے کا تعلق ان سے محبت کے لیے مخصوص نہیں ہے اور وہ روزمرہ کی زندگی میں اکثر پریشان رہتی ہیں۔ تاہم، جو چیز اسے سب سے زیادہ تکلیف دیتی ہے وہ ہے کچھ انتہائی قریبی دوستوں کی طرف سے لاعلمی۔

“جیسا کہ آپ کے شو میں پہلے ذکر کیا گیا ہے، میرے بہت کم قریبی دوست ہیں جو ہمیشہ میرے ساتھ رہتے ہیں۔ اور جس لمحے، وہ مجھے توجہ نہیں دیتے وہ ہے جب اس سے میرا دل ٹوٹ جاتا ہے،” اس نے وضاحت کی۔ “اس کے علاوہ، مجھے کسی کی یا کسی چیز کی پرواہ نہیں ہے۔”

دوسری طرف، شوکت نے بتایا کہ وہ آسانی سے بے وقوف نہیں بنتی اور اپنے آس پاس کے لوگوں سے متاثر نہیں ہوتی۔

اس نے کہا، “میں لوگوں پر بہت آسانی سے بھروسہ کرتی ہوں اور جب مجھے کسی پر اعتماد اور عزت ہوتی ہے تو میں دوسرے شخص سے بھی یہی امید رکھتی ہوں۔ جب اس کا بدلہ نہیں ملتا تو یہ میرے لیے پریشان کن ہوتا ہے۔‘‘

دریں اثنا، کام کے محاذ پر، دونوں اداکار فی الحال اے آر وائی ڈیجیٹل کے روزانہ سیریل ‘سمجھوتا’ میں اسکرین شیئر کر رہے ہیں۔ شازل شوکت نے اسد اور زوہیب کی اکلوتی بہن شانزے پر مضمون لکھا ہے، جبکہ مومنہ اقبال مہرین کا کردار ادا کر رہی ہیں جو کہ اس کی چھوٹی بھابھی اور زوہیب کی بیوی ہے۔

یہ ڈرامہ ‘ان مشکلات کے گرد گھومتا ہے جن کا سامنا ایک فرد کو اس وقت کرنا پڑتا ہے جب اس کا بہتر نصف ابدی ٹھکانے کے لیے نکل جاتا ہے’۔

شو کی کاسٹ میں جاوید شیخ، صبا فیصل، شائستہ لودھی، مرزا زین بیگ، سدرہ نیازی اور ہما نواب بھی شامل ہیں۔ ’سمجھوتا‘ – رخسانہ نگار کی تحریر کردہ اور اسد جبل کی ہدایت کاری میں – پیر تا جمعرات رات 9 بجے صرف اے آر وائی ڈیجیٹل پر نشر ہوتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں