56

سندھ بار کونسل کے سیکریٹری کا قتل: پولیس کو شبہ ہے کہ قتل میں بیوی کا اہم کردار ہے

دی نیوز کی ایک رپورٹ کے مطابق، کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) کراچی کے مقتول سندھ بار کونسل (ایس بی سی) کے سیکریٹری عرفان مہر کے قتل کی منصوبہ بندی ان کی اہلیہ نے کی تھی۔

اس پیش رفت سے باخبر ذرائع نے دی نیوز کو بتایا کہ سی ٹی ڈی کراچی نے مقتول کے بہنوئی اکبر مہر اور ساتھیوں رحیم بخش مہر، واجد جاکھرو اور منگی اور لاشاری ذات کے دو دیگر افراد کو اس کے قتل میں ملوث ہونے پر گرفتار کیا۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مہر کا بہنوئی قتل کا مرکزی ملزم ہے جبکہ ان کے خیال میں اس کی بیوی صاحبزادی نے اپنے شوہر کو قتل کرانے میں کلیدی کردار ادا کیا۔ بیوی ابھی تک مفرور ہے۔

ابتدائی تفتیش سے معلوم ہوا کہ صاحبزادی مہر کی جائیدادوں پر قبضہ کرنا چاہتے تھے۔ تاہم، جب مقتول نے ان میں سے کچھ اپنے بھائیوں کو دیے، تو صاحبزادی نے اپنے بھائی اکبر مہر کے ساتھ مل کر اس کے قتل کی منصوبہ بندی کی۔

ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ پولیس نے اسی کیس کے سلسلے میں سندھ بار کونسل کے ایک عہدیدار ایڈیشنل سیکریٹری پرویز میمن کو بھی حراست میں لیا ہے۔

پولیس نے بتایا کہ اکبر مہر نے اپنے بہنوئی عرفان مہر کو اپنے رشتہ دار رحیم بخش مہر اور دیگر ساتھیوں واجد جاکھرو اور دیگر کی مدد سے قتل کیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انھوں نے قتل کا ہتھیار، ایک 30 بور کا پستول، مہر کو قتل کرنے کے لیے استعمال ہونے والی موٹر سائیکل، ملزمان کے پہنے ہوئے ہیلمٹ اور کراچی کے ایک ہوٹل میں قیام پذیر اکبر مہر اور اس کے ساتھیوں کا ریکارڈ برآمد کر لیا ہے۔

حکام نے مشتبہ افراد کا کال ڈیٹا ریکارڈ (سی ڈی آر) بھی حاصل کر لیا ہے۔

کراچی میں ایس بی سی کے سیکریٹری کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔
اس ماہ کے شروع میں، ایس بی سی کے سیکریٹری عرفان علی مہر کراچی کے علاقے گلستان جوہر میں ان کے گھر کے قریب ایک بندوق کے حملے میں مارے گئے تھے۔

واقعہ گلستان جوہر بلاک 13 میں پیش آیا، مہر کو اسپتال منتقل کیا جا رہا تھا کہ راستے میں وہ دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق ملزمان نے مہر میں یکے بعد دیگرے کئی گولیاں چلائیں اور فرار ہو گئے۔

وکیل نعیم قریشی نے بتایا تھا کہ 45 سالہ مہر اپنی بیٹی کو اسکول چھوڑنے کے لیے اپنی کار میں بلاک 13 واپس آئی تھیں۔ لیکن موٹر سائیکل پر سوار دو مشتبہ افراد نے اس پر اس وقت گولیاں چلائیں جب وہ اپنی گاڑی میں بیٹھے تھے۔

پولیس کو گلستان جوہر میں وکیل کی فائرنگ کی کلوز سرکٹ ٹیلی ویژن (سی سی ٹی وی) کیمرے کی فوٹیج موصول ہوئی تھی۔ ویڈیو میں ملزم کو ہیلمٹ پہنے دیکھا جا سکتا ہے۔ ان میں سے ایک کو گاڑی پر فائرنگ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں