66

مریم نواز نے سوشل میڈیا ایکٹیوسٹ کو گرفتار کرنے پر پی ٹی آئی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا

جیو نیوز نے رپورٹ کیا کہ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے وزیر اعظم عمران خان کے خلاف ٹرینڈ چلانے پر سوشل میڈیا ایکٹوسٹ کو گرفتار کرنے پر موجودہ حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) نے پیر کو صابر ہاشمی نامی ایک کارکن کو گرفتار کر لیا، جس پر سوشل میڈیا پر وزیراعظم عمران خان کے خلاف نازیبا ٹرینڈ چلانے کا الزام ہے۔ ایجنسی نے ہاشمی کا موبائل فون اور دیگر سامان قبضے میں لے لیا ہے۔

ایک ٹویٹ میں مریم نواز نے کہا کہ صابر محمود کا اغوا حکومت کی بوکھلاہٹ کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

مسلم لیگ ن کے نائب صدر نے سوشل میڈیا ایکٹیوسٹ کی گرفتاری پر وزیراعظم عمران خان پر بھی تنقید کی۔

کیا عمران خان ایک مقدس گائے ہے جس کی ناکامی اور لوٹ مار پر تنقید نہیں کی جا سکتی؟ اس نے سوال کیا۔


مریم نواز نے کہا کہ پوری جماعت نہال ہاشمی کے ساتھ کھڑی ہے اور ایف آئی اے بھی حکومت کی کٹھ پتلی بننے سے گریز کرے۔

‘سستا اور ناقابل برداشت عمل’
پیر کو پارٹی کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی (سی ای سی) کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے ذاتی حملوں پر مشتمل غیر مہذب رجحان پر برہمی کا اظہار کیا۔

اس عمل کی مذمت کرتے ہوئے، وزیر اعظم نے اسے “سستا اور ناقابل برداشت” قرار دیا اور مزید کہا کہ “ایسے عناصر کو بے لگام نہیں چھوڑا جا سکتا اور ان کے اعمال کی مذمت کی جانی چاہیے۔”

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں