208

ڈرون واقعہ: پیپلز پارٹی کا ڈی جی آئی ایس آئی سے شفاف تحقیقات کا مطالبہ

پیپلز پارٹی نے انٹر سروسز انٹیلی جنس کے ڈائریکٹر جنرل (ڈی جی) لیفٹیننٹ جنرل ندیم احمد انجم کو خط لکھا ہے جس میں آصفہ بھٹو زرداری کے جلسے کے دوران ڈرون کیمرہ سے ٹکرانے کے واقعے کی تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

پیپلز پارٹی کے ایک بیان کے مطابق پارٹی کے سیکرٹری جنرل نیئر بخاری نے پیپلز پارٹی کی جانب سے ڈی جی آئی ایس آئی کو خط لکھا ہے۔

خط میں واقعے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے آئی ایس آئی سے معاملے کی شفاف تحقیقات شروع کرنے کی درخواست کی گئی۔

ڈرون کیمرہ آصفہ بھٹو زرداری کے چہرے پر ٹکرا گیا۔
رواں ماہ کے شروع میں ایک ڈرون کیمرے نے آصفہ کے چہرے پر اس وقت نشانہ بنایا تھا جب وہ خانیوال میں پیپلز پارٹی کے جلسے کے دوران کنٹینر پر کھڑی تھیں۔

پولیس کی تفتیش میں پتہ چلا کہ ڈرون کیمرہ نجی چینل کی ڈی ایس این جی وین اور پولیس سے چلایا جا رہا تھا۔

پولیس کے مطابق “دو افراد کے علاوہ ٹی وی چینل کے باقی عملے کو حراست میں لے لیا گیا ہے”۔

دریں اثنا، بلاول بھٹو زرداری کی سیکیورٹی ٹیم ڈرون آپریٹر اور انجینئر کو اپنے ساتھ لے گئی، پولیس نے بتایا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں