53

وزیراعظم عمران خان کا سپریم کورٹ کا کوئی بھی فیصلہ قبول کرنے کا اعلان

ذرائع نے جیو نیوز کو بتایا کہ وزیراعظم عمران خان نے جمعرات کو کہا کہ سپریم کورٹ آف پاکستان آج جو بھی فیصلہ سنائے گی وہ اسے قبول کریں گے۔

چیف جسٹس آف پاکستان عمر عطا بندیال نے آج قبل ازیں کہا تھا کہ سپریم کورٹ قومی اسمبلی کے ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری کے وزیراعظم کے خلاف عدم اعتماد کے ووٹ کو روکنے سے متعلق فیصلے سے متعلق ازخود نوٹس کیس کا فیصلہ آج سنائے گی۔

وزیراعظم کا یہ بیان حکومتی قانونی ٹیم کے ساتھ ملاقات کے دوران آیا، ذرائع نے بتایا کہ اٹارنی جنرل آف پاکستان خالد جاوید خان، بابر اعوان اور دیگر موجود تھے۔

ذرائع کے مطابق قانونی ٹیم نے وزیراعظم کو سپریم کورٹ کی کارروائی سے آگاہ کیا۔

بریفنگ سننے کے بعد وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سپریم کورٹ جو بھی فیصلہ سنائے گی ہم قبول کریں گے، پی ٹی آئی انتخابات کے لیے تیار ہے اور ہم کسی غیر ملکی سازش کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

3 اپریل کو قومی اسمبلی کے ڈپٹی سپیکر نے وزیراعظم عمران خان کے خلاف عدم اعتماد کی قرارداد کو ’’غیر ملکی سازش‘‘ قرار دیتے ہوئے روک دیا تھا۔ بعد ازاں صدر عارف علوی نے وزیراعظم خان کے مشورے پر قومی اسمبلی کو تحلیل کرتے ہوئے نئے انتخابات کرانے کا مطالبہ کیا۔

اسی دن، چیف جسٹس بندیال نے سیاسی بحران کا ازخود نوٹس لیا جب کہ اپوزیشن نے حکومت کے “غیر آئینی” ایکٹ کو سپریم کورٹ میں چیلنج کیا۔

آج مسلسل پانچ دن تک اس کیس کی سماعت کے بعد سپریم کورٹ اپنا فیصلہ سنائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں