33

پی ٹی آئی کے کراچی جلسے میں کتنے لوگوں نے شرکت کی؟

پی ٹی آئی رہنماؤں کی جانب سے کراچی کے باغ جناح جلسے میں لوگوں کی بڑی تعداد میں شرکت کے دعوے کے ساتھ، وفاقی اور صوبائی انٹیلی جنس ایجنسیوں نے عوامی اجتماع میں شرکاء کی تعداد کے حوالے سے اپنی رپورٹس جاری کی ہیں۔

دو صوبائی اور وفاقی انٹیلی جنس ایجنسیوں نے اطلاع دی کہ تقریباً 30,000-35,000 لوگوں نے پی ٹی آئی کے عوامی اجتماع میں شرکت کی۔ جب کہ ایک وفاقی اور دو صوبائی ایجنسیوں نے 60,000 سے زیادہ افراد کی تعداد بتائی ہے۔

دریں اثنا، ایک سینئر پولیس افسر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ ہفتے کے روز جلسہ میں 100,000 سے زائد افراد نے شرکت کی، انہوں نے مزید کہا کہ جب عمران خان ہجوم سے خطاب کر رہے تھے تو لوگوں کو زمین کی طرف چلتے ہوئے دیکھا گیا۔

مختلف سیاسی جماعتوں سے وابستہ ذرائع نے انکشاف کیا کہ قائدین اور میڈیا اسٹیجز کے بائیں جانب والے علاقے میں 22,000-25,000 افراد کے لیے جگہ تھی۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر جلسہ کے شرکاء کو زبردستی جگہ پر جگہ دی جائے تو وہاں 30 ہزار سے زیادہ لوگ نہیں بیٹھ سکتے۔

ذرائع نے بتایا کہ تقریباً 4,000-5,000 لوگ گراؤنڈ کے باہر سڑکوں پر موجود تھے۔

وفاقی انٹیلی جنس ایجنسی کے کراچی ڈیسک کے مطابق پی ٹی آئی کے جلسے میں تقریباً 60,000-65,000 افراد نے شرکت کی۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ تقریباً 50,000 سے 55,000 لوگ رات 10 بجے کے قریب باغ جناح میں موجود تھے جبکہ تقریباً 10,000 لوگ گراؤنڈ کے باہر شاہراہ قائدین اور صدر کوریڈور کی سڑکوں پر موجود تھے۔

یہ بھی بتایا گیا کہ جلسے کے دوران پنڈال کے باہر مقررین نے کام کرنا چھوڑ دیا جس سے باغ جناح گراؤنڈ کے باہر موجود لوگوں میں افراتفری پھیل گئی۔

ادھر کراچی پولیس کو جمع کرائی گئی رپورٹ کے مطابق پی ٹی آئی کے اجتماع میں 70 ہزار سے زائد افراد نے شرکت کی۔ سندھ پولیس کی اسپیشل برانچ نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ ہفتہ کو ہونے والی ریلی میں تقریباً 60,000-70,000 افراد نے شرکت کی۔

احاطے کے اندر پیش آنے والے واقعے کے بارے میں، اسپیشل برانچ نے بتایا کہ ٹراس گرنے سے کئی لوگ زخمی ہوئے تھے۔

کراچی میں تعینات ایک اور وفاقی ادارے نے فیلڈ اسٹاف کے اعلیٰ افسران کو جمع کرائی گئی اپنی رپورٹ میں بتایا کہ گراؤنڈ کے اندر 30 سے ​​35 ہزار افراد موجود تھے جب کہ 5 ہزار افراد گراؤنڈ کے باہر موجود تھے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ اعلیٰ ملٹری انٹیلی جنس ایجنسی کے کراچی ڈیسک کی جانب سے بھی ایک رپورٹ تیار کی گئی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ عمران خان کی ریلی میں 30 سے ​​35 ہزار افراد نے شرکت کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں