29

عمران کے چیف آف سٹاف کو بغاوت کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا

سماء ٹی وی کے عادل تنولی نے رپورٹ کیا کہ پی ٹی آئی رہنما اور عمران خان کے چیف آف سٹاف شہباز گل کو اسلام آباد میں بغاوت کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔

عمران خان نے گرفتاری پر پارٹی کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا۔

گل کی گرفتاری کی اطلاع سب سے پہلے پی ٹی آئی کے فواد چوہدری اور مراد سعید نے ٹوئٹر پر دی۔

فواد نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ شہباز گل کو بنی گالہ چوک سے ان لوگوں نے اغوا کیا جو بغیر نمبر پلیٹ گاڑیوں میں آئے تھے۔


بنی گالہ چوک عمران خان کی بنی گالہ رہائش گاہ سے ایک کلومیٹر کے فاصلے پر واقع ہے۔

پی ٹی آئی کے ایک اور رہنما مراد سعید نے بھی اپنی گرفتاری کی اطلاع دیتے ہوئے کہا کہ ان کی گاڑی کے شیشے ٹوٹ گئے ہیں۔

انہوں نے دعویٰ کیا کہ گل کے ایک معاون کو مارا پیٹا گیا۔

پی ٹی آئی کے آفیشل ٹویٹر ہینڈل سے شیئر کی گئی ایک ویڈیو میں کراس اوور گاڑی کے شیشے ٹوٹے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔


بغاوت کے الزامات اور جے آئی ٹی کی تحقیقات
گرفتاری کے بعد گل کو نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا گیا۔

گل کی ‘گرفتاری’ کے بارے میں کوئی سرکاری لفظ نہیں بتایا گیا۔ تاہم، پولیس ذرائع نے تنولی کو بتایا کہ گل کو ان کے خلاف درج ایف آئی آر کے سلسلے میں حراست میں لیا گیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ اسے بغاوت کے الزامات کا سامنا ہے اور اس پر اداروں کے خلاف مہم کے سلسلے میں اکسانے کا الزام ہے۔

انہوں نے ایک پرائیویٹ ٹی وی چینل پر بھی متنازعہ بیان دیا۔ بی بی سی اردو کے مطابق، اس بیان کی وجہ سے پاکستان میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) نے ٹی وی چینل کو شوکاز نوٹس جاری کیا۔

ایک مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) ٹرول مہم کی تحقیقات کر رہی ہے جو بلوچستان کے ضلع لسبیلہ میں پاک فوج کے ہیلی کاپٹر کے گرنے کے فوراً بعد شروع کی گئی تھی۔

مہم، جس کا الزام حکومت نے پی ٹی آئی پر لگایا، اس نے حادثے میں شہید ہونے والے اہلکاروں کی قربانیوں کو کم کرنے کی کوشش کی۔

وفاقی وزارت داخلہ نے نفرت انگیز مہم کی تحقیقات کے لیے ایف آئی اے ٹیم کو کام سونپا۔ پیر کو آئی ایس آئی اور آئی بی سے ایک ایک افسر تحقیقات میں شامل ہوا اور جے آئی ٹی کو مطلع کیا گیا۔

عمران کی گرفتاری کا منصوبہ؟
سماء ٹی وی کے عباس شبیر نے اطلاع دی کہ عمران خان نے گل کی گرفتاری پر پارٹی کا ہنگامی اجلاس بلایا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی آج عدالتوں سے رجوع کرے گی جبکہ پارٹی اجلاس میں گل کی گرفتاری کے بعد کی صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا۔

مراد سعید نے اپنی ٹوئٹس میں کہا کہ کل (پیر) کی رات ایک ’خوفناک منصوبہ‘ بنایا گیا تھا لیکن عمران خان کے وفاداروں نے خبردار کیا کہ خان ہی سرخ لکیر ہیں۔

سعید نے اس مبینہ منصوبے کی وضاحت نہیں کی جس کا وہ حوالہ دے رہے تھے۔ تاہم عمران خان کے قریبی ساتھی شیخ رشید نے بھی عمران خان کی ممکنہ گرفتاری اور ان کی نااہلی کے حوالے سے بات کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں